رضا کوچنگ سینٹر کا قابل ستائش قدم، رضا فورٹی کاقیام

 

۷ مارچ ، شہرآہن جمشید پور جھارکھنڈ کے مسلم اکثریتی علاقہ آزادنگر کے مدینہ مکتب نزد  مدینہ مسجد میں الحاج مختار صفی عرف مسٹر بھائی کی صدارت میں دانشورں کی ایک اہم میٹینگ رکھی گئی، جس کا موضوع مسلمانوں کو تعلیمی پستی سے نکالنا تھا۔ وقت کی اس ضرورت کی تکمیل کے لیے ‘‘رضا فورٹی’’ کا باقاعدہ قیام کیا گیا، جس کے مقصد کی وضاحت کرتے ہوئے ادارہ کے بانی و ڈائریکٹر مفتی عبد المالک مصباحی ایم ۔ اے میسور حیدر آباد نے مسلمانوں کی تعلیمی پسماندگی پر بڑے مفکرانہ انداز میں روشنی ڈالی ۔حضرت مفتی صاحب نے اپنی گفتگو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ ‘‘رضا فورٹی’’ کا مقصد تعلیم کےمیدان میں مسلم بچوں کو بیدار کرنا ، مسلم بچوں کے لیے اعلیٰ تعلیم کے حصول کی راہ آسان کرنا ، مسلم بچوں میں اعلیٰ تعلیم کے حصول کے لیے بیداری  کی لہر  دوڑانا ہے ۔ گورنمنٹ کے اعلیٰ عہدوں پر پہنچنے کے لیے اور حکومت کے انتظامی امور میں خود کو شریک کرنے کے لیے آئی، پی، ایس ( I.P.S) پی،ایس،سی، (P.S.C ) نیز آئی ،آئی ،ٹی (I.I.T) اور میڈکیل (Medical) وغیرہ کی تیاری کے لیے ہر سال چالیس (Forty) ضرورت مند، ذہین اور باذوق مسلم بچوں کی کفالت کرنا ۔ ان کے رہنے سہنے اور کھانے پینے کے انتظام سے لے کر فیس وغیرہ کے اخراجات برداشت کرنا۔ان شاء اللہ ۔مگر اس دشوار گزار وادی میں قدم رکھنے سے پہلے طلبہ کی ذہن سازی اور لوگوں کو

مکمل طریقے سے بیدار کرنے کے لے ایک اعلیٰ قسم کے کوچنگ سینٹر بنام ‘‘رضا کوچنگ سینٹر’’ کا اہتمام کیا جارہا ہے جس کا باقاعدہ آغاز یکم اپریل ۲۰۱۷سے ہوگا۔ ان شاء اللہ ۔

اسی مجمع عام میں باتفاق رائے جناب الحاج  محمد اتالیق حسین کو خزانچی کا عہدہ سونپا گیا ۔ معززین شہرنے حضرت مفتی صاحب بانی و ڈائریکٹر ‘‘رضا فورٹی’’ کے اس اقدام کو خوب خوب سراہا اور اپنے بھرپور تعاون کا وعدہ کیا۔اس نشست میں ڈاکٹر منصور، جناب آصف علی ،جناب جاوید صدیقی، ڈاکٹر اشرف عالم صاحبان وغیرہ نے اپنے خیالات پیش کیے اور مفید مشوروں سے نوازا۔ شرکائے نشست میں پروفیسر بدرالدین ، پروفیسر منظر حسین ، سید شوکت علی ، سید تنویرعلی،سید ارشاد الحق ، عبد الطاہر انجینئر ،بلال انجینئر ، معراج الدین وکیل ،عبدالرئوف انصاری،شفیق فدائی ،ماسٹر یونس ،ماسٹر ظفر اقبال ، ماسٹر شوکت اسلام ،الحاج نصیر خاں، الحاج عبد المبین، محمد نسیم اختر،محمد توقیرسوری ،محمد ابرار احمد،سہیل احمدخاں،محمد امتیاز احمد، محمد ابرار احمد،سہیل احمد خاں،محمد امتیاز احمد، محمد الیاس، محمد اسلم، حافظ خورشید ربانی، حاجی تسنیم، محمد انیس، محمدشمسیر، محمد ابرار، محمد علی، منظور احمد، محمد عمران، فتح محمد، محمد رفیق، محمد خالد ریاض، محمد شفیع کے علاوہ اور بھی بہت سے اہل علم ودانش موجود تھے ۔

Check Also

Independence Day celebrated at all the dargahs including in Ajmer Sharif and Delhi

By WordforPeace Correspondent All India Ulama & Mashaikh celebrated 71st Independence Day with great fervor …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *